SHEHR E KHAMOSHAN BY QANITA KHADIJA

یہ شہر خموشاں ہے یہاں باتیں نہیں کرتے😢
یہ شہر خموشاں ہے یہاں باتیں نہیں کرتے😢
روتے ہیں یہاں ہنس ہنس کر ملاقاتیں نہیں کرتے👬
جو ان پر گزرتی ہے اگر تجھ کو خبر ہو💔

ONLINE READ:

PDF DOWNLOAD LINK:

SHEHAR E KHAMOSHAN COMPLETE

One thought on “SHEHR E KHAMOSHAN BY QANITA KHADIJA

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *